ملتان :  بھاری بھر کم بلا جواز بجلی ،گیس کے بل ،اور سرکاری ملازمین کی تنخواہوں پر ٹیکس کے نفاذ سے لوگ نفسیاتی مریض بن کر خود کشیوں پر مجبور ہو چکے ہیں ان خیالات کا اظہار عوامی احتساب سیل و نیشنل لیبر الائنس کے مرکزی چیئرمین غازی احمد حسن كھوكھر نے احاطہ لیبر کورٹ میں مزدوروں سے خطاب کرتے ہوئے کیا انھوں کہا حکمران مزدوروں ،غریبوں،اورسفید پوش طبقہ پر رحم کریں تاکہ آنے والے وقتوں میں عوام بھی ان پر رحم کرسکیں انھوں نے کہا کہ حکومتیں نہیں بدلتی محض چہرے بدل جاتے ہیں ملک کو 77سالوں میں بجلی بحران سے نجات نہیں مل سکی دنیا کے کئی بے وسائل ممالک نے ترقی اور خوشحالی حاصل کر لی ہے جبکہ پاکستان قدرتی وسائل سے مالامال اور زرعی اجناس کی بھر مار ،سونا اگلنے والی زمینوں کے باووجود مفلوک الحالی کا شکار ہیں غازی احمد حسن كھوكھر نے کہا پاکستان میں سیاستدانوں نے جمہوریت کا وقار مجروح کر کے رکھ دیا ہے یہی وجہ ہے کہ عوام موجودہ جمہوریت اور جمہوری نظام سے بے زار ہو کر مایوسی کا شکار ہو گئی ہے حکمران عوامی مشکلات کے حل کے لئے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کریں اور بجلی گیس اور بلا جواز ظالمانہ ٹیکس کے نفاذ سے باز رہیں بصورت دیگر عوامی طوفان حکمرانوں کے قلعے و محلات کے خس و خاشاک کی طرح اڑا لے جائے گا