اسلام آباد: قومی اسمبلی میں حکومت کی جانب سے امریکی ایوان نمائندگان کی قرارداد کے خلاف قرارداد بھاری اکثریت سے منظور کرلی گئی اور اس کو پاکستان کے اندورونی معاملات میں مداخلت گردانتے ہوئے کہا گیا کہ امریکی قرارداد پاکستان کے سیاسی اور انتخابی عمل سے مکمل طور پر لاعلمی کا مظہر ہے۔ حکمران جماعت پاکستان مسلم لیگ (ن) کی رکن قومی اسمبلی شائستہ پرویز ملک نے امریکی ایوان نمائندگان کی پاکستان کے بارے میں منظور کی گئی حالیہ قرارداد پر قومی اسمبلی کے اجلاس میں قرارداد پیش کی جس کو اکثریت کی بنیاد پر منظور کرلیا گیا جبکہ سنی اتحاد کونسل کی جانب سے احتجاج اور شور شرابا کیا گیا اور نعرے بازی کی گئی۔ بعدازاں قومی اسمبلی کا اجلاس غیرمعینہ مدت تک ملتوی کردیا گیا۔