کراچی: شہر قائد کے علاقے گلشن اقبال میں پولیس انسپکٹر رحمان میرانی کا بیٹا دستی بم پھٹنے کی وجہ سے دو شہریوں سمیت جاں بحق ہوگیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ڈی آئی جی ایسٹ غلام اظفر مہیسر نے بتایا کہ حادثہ گلشن اقبال ٹاؤن تھانے کی حدود میں قائم حاجی لیموں گوٹھ میں پیش آیا جب 17 سالہ فاروق میرانی بم ہاتھ میں لئے گھر سے باہر گلی میں جارہا تھا۔ گلی میں موجود بچوں نے فاروق کے ہاتھ میں بم دیکھ کر شور مچایا جس پر فاروق نے بم چھپانے کی کوشش کی۔ ڈی آئی جی نے بتایا کہ دستی بم چھپانے کی کوشش کے دوران بم کی پن نکلی جس پر دھماکا ہوا جس کے نتیجے میں فارق میرانی اور دو مزید شہری ریحان اور نسرین جاں بحق ہوگئے۔ ڈی آئی جی ایسٹ غلام اظفر نے مزید بتایا کہ جاں بحق ہونے والے فاروق میرانی کا باپ رحمان میرانی گلشن اقبال تھانے میں بطور سب انسپکٹر تعینات ہے جسے کچھ عرصہ قبل معطل بھی کیا گیا تھا۔ ڈی آئی جی ایسٹ کا مزید کہنا تھا کہ سب انسپکٹر حاجی لیموں گوٹھ کا ہی رہائشی ہے۔ واقعے کے بعد سب انسپکٹر کے گھر کی تلاشی بھی لی گئی ہے۔